رسائی کے لنکس

logo-print

نیدرلینڈز میں ایک کتا اور تین بلیاں کرونا وائرس سے متاثر


نیدرلینڈز کے حکام نے کہا ہے کہ ایک کتے اور تین بلیوں کے کرونا وائرس سے متاثر ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ یہ ملک میں پالتو جانوروں کے کرونا وائرس میں مبتلا ہونے کے اولین واقعات ہیں۔

وزیر زراعت کیرولا شاؤٹن نے پارلیمان کو تحریری طور پر اس بارے میں آگاہ کیا۔ کتے کے بارے میں خیال ہے کہ اسے اپنے مالک سے وائرس لگا۔

انھوں نے کہا کہ یہ ضروری ہے کہ پالتو جانوروں کے مالک اس مشورے پر عمل کریں: کرونا وائرس کے مریض احتیاطی تدبیر کے طور پر اپنے جانوروں سے دور رہیں۔ جو پالتو جانور بیمار ہوں انھیں جس حد تک ممکن ہو، گھر کے اندر رکھا جائے۔

دنیا بھر میں لاکھوں انسان کرونا وائرس میں مبتلا ہوچکے ہیں، لیکن اس وبا سے چند ایک ہی جانور متاثر ہوئے ہیں۔ اس وائرس کے حملے میں سانس لینے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

نیدرلینڈز کے قومی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ ملک میں جانوروں سے انسانوں کو وائرس لگنے کا خدشہ بہت کم ہے۔

گزشتہ ماہ ملک کے جنوب میں ایک فارم پر متعدد منکس کو کرونا وائرس میں مبتلا پایا گیا تھا۔ منک اود بلاؤں کی قسم کا ممالیہ جانور ہوتا ہے۔

کیرولا شاؤٹن نے بتایا کہ اس فارم کے قریب رہنے والی گیارہ بلیوں کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ کیے گئے تو معلوم ہوا کہ تین میں وائرس کی اینٹی باڈیز موجود تھیں۔ اس سے ثابت ہوا کہ انھیں وائرس لگا تھا لیکن وہ صحت یاب ہوچکی ہیں۔

اسی طرح ایک شخص کے 8 سال کے پالتو امریکن بل ڈاگ کو سانس لینے میں دشواری پر جانچا گیا۔ اس کے خون کا نمونہ لیا گیا تو ظاہر ہوا کہ اس میں بھی وائرس کی اینٹی باڈیز پیدا ہوچکی تھیں۔

اس سے پہلے کئی ملکوں میں بلیاں، شیر اور کتے کرونا وائرس میں مبتلا ہوچکے ہیں۔ فروری میں ہانگ کانگ میں ایک شخص کے بیمار ہونے کے بعد اس کا کتا بھی وائرس سے متاثر ہوگیا تھا۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG